جیسے بارش کےپانی میں بہا کر مسکراتے ہیں

295

جیسے بارش کےپانی میں بہا کر مسکراتے ہیں
مجھے کاغذ کی وہ کشتی زرا پھر سے بنا دینا

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here